فرانس میں گستاخانہ خاکے شائع کرنے کے خلاف میانی میں احتجاجی ریلی نکالی گئی

بھیرہ۔ میانی میں نبیﷺ کی شان میں فرانس میں گستاخانہ خاکے شائع کرنے کے خلاف احتجاجی ریلی نکالی گئی
ریلی میں تمام مکاتب فکر کے علماءکرام نے شرکت کی مظاہرین نے فرانس کے خلاف پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے اور شدید نعرے بازی کرتے رہے مظاہرے میں مختلف دینی جماعتوں کے کارکنان کے علاوہ سینکڑوں کی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی۔ ریلی کے شرکاءنے مطالبہ کیا کہ فرانس کے ساتھ تمام سفارتی تعلقات ختم کیے جائے فرانس کے سفیر کو فوری طور پر واپس بھیجا جائے اور فرانس کے ساتھ مکمل بائیکاٹ کرتے ہوئے فرانس کی بنی ہوئی اشیاءکا بائیکاٹ کیا جائے نہ ہی کوئی دکان دار فرانس کی بنی ہوئی اشیاءفروخت کرے اور نہ ہی کوئی بھی اشیاءخریدے۔ناموس رسالت کی حفاظت ہر مسلمان پر فرض ہے اور ہم سب اس کا دفاع کرنے کے لئے ہر وقت تیار ہے تمام مسلمانوں کو ہر سطح پر اس گھٹیا حرکت پر اپنا احتجاج کروانا چاہیے۔مقررین جن میں مفتی محمد سہیل شرف، محمد زبیر گوندل،ملک عبدالمنعم اعوان،قاری محمد خلیل عرفانی، نے مختلف جگہ پر خطاب کیا اور حکومت پاکستان سے مطالبہ کیا حکومت سفارتی سطح پر احتجاج ریکارڈ کروائے اور فرانس کو ایسے متنازع مواد کی اشاعت سے روکا جائے۔ ریلی میانی سبزی منڈی سے شروع ہو کر میلاد چوک میں اختتام پذیر ہو ئی راستے میں فرانس کے صدر کے پتلے کو نظرِآتش کیا گیا اور دکانوں پر بھی مذمتی بینرز اور پلے کارڈ آویزاں تھے(فتخاراحمد)

Check Also

دادو کی تحصیل میہڑ میں ڈاکیتی کی واردات

دادو کے تحصیل میہڑ ۔(محمد حسن کھوسہ )میہڑشہر کا امن تبام پولیس خاموشخیرپورناتھن شاہ کے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے