جو چوری نہیں کرتا اسے لندن بھاگنے کی ضرورت نہیں پڑتی، وزیراعظم

پشاور: وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ جب چوری نہ کی ہو تو پھر لندن بھاگنے کی ضرورت نہیں ہوتی۔

مہمند میں جلسے سے خطاب کے دوران وزیر اعظم نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں ہمارے 80 لاکھ کشمیری بہن بھائیوں کو 7 ماہ سے بھارتی فوج نے گھروں میں بند کیا ہوا ہے، پوری پاکستانی قوم اپنے کشمیری بھائی بہنوں کے ساتھ کھڑی ہے، دعا کرتے ہیں اللہ آنے والے وقت میں آپ کو اس ظلم سے آزاد کرے۔ دنیا سے پہلے ہی کہا تھا کہ مودی کی حکومت انتہاپسند ہے، آر ایس ایس کا نظریہ مسلمانوں سے نفرت کا نظریہ ہے، اور پھر دنیا نے دیکھا مودی نے دہلی میں ظلم کیا، دہلی میں پولیس کے ساتھ مل کر آر ایس ایس کے غنڈوں نے مسلمانوں پر ظلم کیا، آر ایس ایس کا نظریہ تمام مذہبی اقلیتوں کے خلاف ہے، یہ آخر میں سکھوں اور عیسائیوں کے خلاف ہو گا۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ اللہ نے پاکستان پر نعمتوں کی بارش کی ہوئی ہے،پاکستان میں بے پناہ معدنیات اور 12موسم ہیں، مہمند میں بہترین زیتون کی پیداوارہوتی ہے، قبائلی علاقے میں صحت احساس پروگرام لارہے ہیں، قبائلی نوجوانوں کو کاروبار کے لیے قرضے فراہم کریں گے، مہمند کے عوام کو مہمند ڈیم سے پانی فراہم کریں گے، مہمند میں انڈسٹریل اسٹیٹ لگائیں گے، خواتین کو گائے، بکریاں اور بھینسیں دے رہے ہیں، ہرسال ہم پچاس ہزار مستحق طلباء کو اسکالرشپس دیں گے، جاتے ہی کوشش کروں گا تجارت کے لیے آپ کا بارڈر کھلے، قبائلی علاقوں میں تھری جی اور فورجی کے لئے مراد سعید کی ڈیوٹی لگا رہا ہوں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے