ڈزنی ورلڈ کا 43 ہزار ملازمین کو جبری رخصت پر بھیجنے کا منصوبہ

ایڈونچرس تھیم پارک کی مالک اور دنیا کی سب سے بڑی انٹرٹینمنٹ کمپنی کا درجہ رکھنے والی امریکا کی ملٹی نیشنل کمپنی ’ڈزنی‘ نے دنیا بھر میں اپنے تمام پارکس کو ’کورونا وائرس‘ کے پھیلنے کے خدشے کے پیش نظر بند کردیا تھا اور اب ڈزنی ورلڈ نے اپنے 43 ملازمین کو جبری رخصت پر بھیجنے کا منصوبہ بنالیا ہے۔

یہ ملازمین ڈزنی ورلڈ کو سروس ٹریڈ کاؤنسل یونین کی جانب سے فراہم کیے گئے تھے، جو فلوریڈا کے تھیم پارک میں ملازمت کر رہے ہیں . کمپنی کے ایک عہدیدار کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ یہ فیصلہ یونین کو پسند نہیں آیا، البتہ جو صورتحال اس وقت ہے اس کو مدنظر رکھتے ہوئے ڈزنی کمپنی کو حق حاصل ہے کہ وہ یہ فیصلہ کرے۔

انہوں نے مزید کہا کہ عام طور پر جب ملازمین کو جبری رخصت پر بھیجنے کا منصوبہ کیا جاتا ہے تو انہیں واپسی کی تاریخ بھی بتائی جاتی ہے تاہم کورونا وائرس کے باعث فی الحال ان کو واپس طلب کرنے کے حوالے سے کوئی فیصلہ نہیں کیا گیا۔

رپورٹ کے مطابق جن ملازمین کو جبری رخصت پر بھیجا جا رہا ہے وہ چھٹیوں کے باوجود صحت الاؤنس حاصل کرسکیں گے اور نہ ہی ان کی سینیارٹی ختم کی جائے گی اور نہ ہی انہیں بحالی کے بعد پہلے سے کم تنخواہ دی جائے گی۔

ملازمین کو اس جبری جھٹی کے دوران مراعات ملیں گی

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے