وفاقی حکومت کا 30 ستمبر تک کورونا ویکسی نیشن نہ کرانے والے افراد پر پابندیاں عائد کرنے کا فیصلہ

وفاقی حکومت کا 30 ستمبر تک کورونا ویکسی نیشن نہ کرانے والے افراد پر پابندیاں عائد کرنے کا فیصلہ

اسلام آباد(ویب ڈیسک)  وفاقی حکومت کا 30  ستمبر تک کورونا ویکسی نیشن  نہ کرانے والے افراد پر پابندیاں عائد کرنے کا فیصلہ تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر منصوبہ بندی و سربراہ این سی او سی( نیشنل  کمانڈ اینڈ آپریشن سنٹر) اسد عمر  نے کہاکہ 30ستمبر کے بعد کورونا ویکسی نیشن کے بغیر ہوائی سفر پر پابندی ہوگی، ہوٹل، گیسٹ ہاسز اور شادی ہالز میں آنے والوں کیویکسی نیشن لازم ہے، 17سال سے زائد عمر کے طلبا کیلئے ویکسی نیشن لازمی قرار دی گئی ہے، طلبا کے ٹرانسپورٹیشن عملے کو 31اگست تک ویکسین لگوانا ہوگی، منگل کے روز میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ 31اگست کے بعد اسکول ٹرانسپورٹر ویکسین کے بغیر کام نہیں کرسکے گا، اسکول وین ڈرائیوز کو بھی ویکسی نیشن لازمی کرانا ہو گی، ہوٹل اور شادی ہالز میں آنیوالوں کیلئے 30ستمبر تک ویکسی نیشن لازمی ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ 15اکتوبر کے بعد موٹروے پر سفر کیلئے ویکسی نیشن لازمی قرار دی گئی ہے 15اکتوبر کے بعد بغیر ویکسی نیشن پبلک ٹرانسپورٹ میں سفر کی اجازت نہیں ہوگی، 17سال یا زائد عمر کے طلبا 15 ستمبر تک ویکسین لازمی لگوائیں، حکومت کیلئے ہر پاکستانی کی صحت اہم ہے، تعلیمی اداروں میں 89فیصد اساتذہ اور عملے کی ویکسی نیشن ہوچکی ہے، وبا کی وجہ سے جو بندشیں لگائی جا رہی ہیں وہ عوام کے مفاد میں ہیں۔ اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے معاون خصوصی فیصل سلطان نے کہا کہ یکم ستمبر سے 17سال سے اوپر نوجوانوں کیلئے ویکسی نیشن شروع کر رہے ہیں، کمزور دفاعی نظام کے حامل نوجوانوں کیلئے مخصوص ویکسی نیشن شروع کر رہے ہیں، کسی دوسرے ملک سے ویکسی نیشن کرانیوالے افراد کا اندراج بھی نادرا ویب سائٹ پر ہوسکے گا، ویکسین لگوائیں اور اصل کورونا ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ نادرا ویب سائٹ سے حاصل کریں۔

Share

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے