ایک عام پاکستانی کا امریکی صدر جو بائیڈن کو ٹیلی فون ، کیا کہا ؟ جانیں

ایک عام پاکستانی کا امریکی صدر جو بائیڈن کو ٹیلی فون ، کیا کہا ؟ جانیں

 ٹیلی فون ” 
بسم اللہ الرحمن الرحیم 
جناب صدر ۔۔۔۔۔ کئی ماہ سے آپ کی 
فون کال کا ” انتظار ” کیا ۔۔۔ اب سوچا 
خود ھی ” فیس بک ” پہ بات کر دیتا ھوں 
جو اللہ چاھے تو ۔۔۔۔ آپ یا آپ کے بچوں اور 
ان کے بچوں تک بات پہنچ جائے گی دوڑے 
 آتے کل میں چپکے چپکے سے ۔۔۔ Ral mil k میرے دل میں ایک ” خیال ” آیا کہ اگر میں آپ کی جگہ ھوتا اور ” مسلم ھم دردی ووٹ ” لیکر ۔۔۔ انہیں ” مثبت پیغامات ” دے کر وائیٹ ھاوس پہچتا ۔۔۔ تو ” ایک کام ” کیا کرتااااا ؟؟؟ ” ایک کام ” میں ایک کام یہ کرتا ۔۔۔۔ ” سوچتا ” کہ – کوئی بھی ” کتاب ” چند سالوں بعد ” باسی ” ھو جاتی ھے ان ( ترقی پذیر مسلمانوں ) کی کتاب ( قران مجید ) کیوں ؟ قائم و دائم است – ساڑھے 14 سو سال سے “زندہ و قائم کتاب ” کا یہ ” حق ” بنتا ھے کہ کم از کم ایک بار اس کتاب کا ” ترجمہ ” اپنی زبان میں ” پڑھا ” جائے اورررر میں غور سے ” ترجمہ ” پڑھتا اور اس کے بعد اس ( کتاب عظیم ) کے ساتھ اپنے تعلق کا تعین کرتا چپکے چپکے سے دن بہ دن ماہ بہ ماہ سال بہ سال اس ( کتاب ” زندہ ” ) کے زندہ ” مصنف ( اللہ ) کے ساتھ ساتھ ” رل مل کے “

Share

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

close