نیب ملک کا کرپٹ ترین ادارہ ہے، شاہد خاقان عباسی

نیب ملک کا کرپٹ ترین ادارہ ہے، شاہد خاقان عباسی

کراچی(ویب ڈیسک)   پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما و سابق وزیر اعظم  شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ بڑے بڑے کرپشن کیسز نیب کو نظر نہیں آ رہے، ملک کی خارجہ پالیسی  واضح نہیں ترجیحات طے کرنے کی ضرورت ہے، تفصیلات  کے مطابق پیر کو عدالت میں پیشی کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ  نیب حزب اختلاف کو دبانے کی کوشش میں ہے جبکہ مقدمات کی وجوہات پوراپاکستان جانتا ہے، اتنے بڑے بڑے کرپشن کیسز ہیں لیکن وہ نیب کو نظر نہیں آتے، شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ ملک کی خارجہ پالیسی واضح نہیں،اس کے بارے میں کچھ تو پتہ چلے، ترجیحات طے کرنے کی ضرورت ہے انہوں نے کہا کہ اس ملک کا کرپٹ ترین ادارہ نیب ہے اور آج ایسی کوئی وزارت نہیں جہاں اربوں کا اسکینڈل نہ ہو، عدل کا نظام صرف عدالت میں نہیں بلکہ ہر ادارے میں ہوتا ہے جبکہ نیب جن کو استعما ل کر رہا ہے اور جو استعمال ہو رہے ہیں سب کو جوابدہ ہونا ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ 3سال گزر گئے ہیں لیکن ہم کہاں ہیں ؟ طے کرنا ہو گا کہ ووٹ کو عزت دینی ہے یا پھر چوری ہی ٹھیک ہے،آئین میں پارلیمنٹ کا ایک مقام ہے اور اسے اہم سمجھنا چاہیے،انہوں نے کہا کہ نیب کو اپنے گھر کا بھی معائنہ کرنا چاہیے،افغانستان سے متعلق بات کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ افغانستان سے متعلق پالیسی پارلیمنٹ کے مشترکہ سیشن میں طے کی جائے۔

Share

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

close