یکسانیت کے شکار تخلیقی صلاحیت سے خالی ڈراموں میں اداکاری نہیں کروں گی‘ صحیفہ جبار

یکسانیت کے شکار تخلیقی صلاحیت سے خالی ڈراموں میں اداکاری نہیں کروں گی‘ صحیفہ جبار

کراچی (ویب ڈیسک) اداکارہ صحیفہ جبار خٹک نے یکسانیت کے شکار، خواتین مخالف اور غیر تخلیقی کہانیوں اور مناظر پر مبنی ڈراموں کی بھرمار پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ  یکسانیت کے شکار اور تخلیقی صلاحیت سے خالی ڈراموں میں اداکاری نہیں کریں گی۔۔اداکارہ نے انسٹاگرام اسٹوریز میں ڈراموں کی کہانیوں اور کرداروں پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا کہ وہایسے اسکرپٹ کی منتظر ہیں جو انہیں باقیوں سے منفرد لگے۔اداکارہ نے متعدد اسٹوریز میں بتایا کہ یہ خیال یا خبریں غلط ہیں کہ انہوں نے اداکاری چھوڑ دی ہے اور وہ ایکٹنگ کو غلط سمجھتی ہیں۔صحیفہ جبار خٹک نے واضح کیا کہ وہ اداکاری کو آرٹ سمجھتی ہیں، وہ شوبز انڈسٹری میں سخت محنت کرنے والے اداکاروں، ہدایت کاروں، پروڈیوسرز، لکھاریوں اور تکنیکی عملے کی خدمات اور محنت کا قدر و اعتراف کرتی ہیں مگر یہ بھی حقیقت ہے کہ اب ہمارے ڈرامے یکسانیت کا شکار ہو چکے ہیں۔ اداکارہ نے لکھا کہ ہمارے ڈراموں میں ایک طرح کی ہی کہانیاں پیش کی جا رہی ہیں اور ملتے جلتے خواتین کو کم تر یا کمزور دکھانے کے کردار تخلیق کیے جا رہے ہیں۔انہوں نے سوال کیا کہ خواتین کو ہی ہر بار مسائل کا شکار دکھایا جاتا ہے۔ اداکارہ نے لکھا کہ ہر ڈرامے میں خواتین کو گھروں تک محدود دکھایا جا رہا ہے یا پھر انہیں گھر سے باہر اغوا ہوتے ہوئے اور ان کی شادیاں کراتے ہوئے دکھایا جاتا ہے۔صحیفہ جبار خٹک نے لکھا کہ انہیں مجبور ہوکر یہ لکھنا پڑ رہا ہے کہ وہ یکسانیت کے شکار اور تخلیقی صلاحیت سے خالی ڈراموں میں اداکاری نہیں کریں گی۔صحیفہ جبار نے اپنی اسٹوریز میں ڈراما پروڈیوسرز و ہدایت کاروں کو اپیل بھی کی کہ اگر ان کے پاس شاندار ڈائلاگز اور اچھوتے خیالوں پر مبنی جاندار کرداروں کے ڈرامے ہوں تو انہیں اسکرپٹ ضرور بھیجیں۔

Share

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

close