مہنگائی کا جن بے قابو، آٹے کی قیمت تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئی

مہنگائی کا جن بے قابو، آٹے کی قیمت تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئی

محکمہ خوراک کی ناقص حکمت عملی، ہٹ دھرمی کا خمیازہ عوام بھگتنے لگے، محکمہ خوراک نے غریب عوام کی 2 وقت کی روٹی بھی مشکل کر دی۔ تفصیلات کے مطابق 20کلو آٹے کا تھیلا مزید 40 روپے مہنگا ہوکر 1200 روپے کا ہوگیا، گندم فی من 2 ہزار 115 روپے سے بڑھ 2 ہزار 195 تک پہنچ گئی۔ فلور ملز ایسوسی ایشن کا کہنا ہے کہ شہر میں یومیہ 75 ہزار سے 80 ہزار بوری کی کھپت ہے، سرکاری گندم کے بجائے اوپن مارکیٹ سے گندم خریدنا پڑتی ہے، سرکاری گوداموں سے گندم کی 1 بوری بھی ریلیز نہ ہوسکی جبکہ یکم ستمبر کو سرکاری گندم کی ریلیز کا وعدہ کیاگیا۔ ان کا کہنا ہے کہ گندم کی ریلیز سے اوپن مارکیٹ پرلوڈ کم ہوگا اور ڈیمانڈ کالوڈ کم ہونے سے قیمت بھی معمول پر آئے گی۔

Share

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

close