ڈالر 180 روپے تک جانے کا امکان۔ 2022 میں ڈالر 180 روپے تک چلا جائے گا؛ فچ ریٹنگ ایجنسی کی پیشگوئی

ڈالر 180 روپے تک جانے کا امکان۔ 2022 میں ڈالر 180 روپے تک چلا جائے گا؛ فچ ریٹنگ ایجنسی کی پیشگوئی

کراچی (ویب ڈیسک) فچ ریٹنگ ایجنسی نے پیشگوئی کی ہے کہ پاکستان میں 2022میں ڈالر کی قیمت 180 روپے تک جائے گی۔تفصیلات کے مطابق ڈالر کی قیمت میں مسلسل اضافے کی وجہ سے سرمایہ کار سرمایہ کاری سے کترانے لگے پاکستانی کرنسی میں مسلسل کمی کے باعث عوام پر مہنگائی کا بوجھ مزید بڑھ گیا ہے ڈالر مہنگا ہونے سے تیل‘ گیس‘ بجلی مہنگی ہوگی جبکہ روزہ مرہ استعمال کی اشیاء کی قیمتوں میں بھی اضافہ ہوگا اور مہنگائی کا ایک نیا طوفان کھڑا ہونے کا خدشہ بڑھ گیا ہے آنیوالے دنوں میں مزید مہنگائی عوام کیلئے مشکلات پیدا کریگی ماہرین کا کہنا ہے کہ جس طرح ڈالر اوپر جارہا ہے اور آئندہ چند ماہ میں خدشہ ہے کہ ڈالر 200 روپے کا نہ ہوجائے۔
اسی حوالے سے فچ ریٹنگ ایجنسی کے مطابق افغانستان کی حالیہ صورتحال کے باعث پاکستانی روپے کی قدر مزید گرے گی۔ 2022میں ڈالر کی قیمت کے حوالے سے فچ ریٹنگ ایجنسی نے بہت اہم پیشگوئی کی ہے۔انہوں نے کہا کہ 2022 میں ڈالر 180روپے تک چلا جائے گا۔یہاں واضح رہے کہ گذشتہ روز ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ روپے کے مقابلے ڈالر کی قدر172روپے کی بلند ترین سطح پر جا پہنچی تھی۔

فاریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کی رپورٹ کے مطابق انٹر بینک اور مقامی اوپن کرنسی مارکیٹ میں ڈالر کے مقابلے روپے کی بے قدر کا سلسلہ جاری ہے۔ بدھ کو انٹر بینک میں روپے کے مقابلے ڈالر کی قدر میں70پیسے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس سے ڈالر کی قیمت خرید 169.95روپے سے بڑھ کر170.60روپے اور قیمت فروخت170روپے سے بڑھ کر170.70روپے ہو گئی اسی طرح40پیسے کے اضافے سے مقامی اوپن کرنسی مارکیٹ میں ڈالر کی قیمت خرید 171.20روپے سے بڑھ کر171.60روپے اور قیمت فروخت171.60روپے سے بڑھ کر172روپے پر جا پہنچی ۔
فاریکس رپورٹ کے مطابق یورو کی قدر قیمت خرید 199.50روپے اور قیمت فروخت201روپے پر بدستور برقرار رہی جبکہ1.80روپے کی نمایاں کمی سے برطانوی پونڈ کی قیمت خرید 233.50روپے سے گھٹ کر232روپے اور قیمت فروخت235.80روپے سے گھٹ کر234روپے پر آ گئی ۔

Share

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

close